185

تعمیراتی صنعت میں ’’ مقبول‘‘ جدید ٹیکنالوجیز !

کسی بھی ملک کی معاشی ترقی کے لئے تعمیراتی صنعت ایک فعال قوت تصور کی جاتی ہے ماہرین کے مطابق تعمیراتی شعبہ معاشی ترقی اور سماجی تبدیلی کے لئے بہترین معاون ہے۔ یہی وجہ ہے کہ دنیا بھر کی قوموں کی ترقی کا انحصار اس کی تعمیراتی صنعت پر بھی منحصر ہوتاہے 2011سے 2018کے عرصہ میں عالمی تعمیراتی صنعت میں تیزی سے مثبت تبدیلیاں رونما ہوئیں جن سے ایک طرف تعمیراتی صنعت کی پیداوار میں تیزی سے اضافہ ہوا تو دوسری جانب ما حول دوست ایجادات اور جدید ٹیکنالوجی کے استعمال سے پیداواری صلاحیت بڑھانے میں بھی بے حد مددحاصل ہوئی ۔ اس برس کے اعداد وشمار کے مطابق عالمی تعمیراتی صنعت کی مجموعی پیداوار میں 2018میں 3.6فیصد اضافہ دیکھنے میں آیا، تعمیراتی صنعت میں جدید ٹیکنالوجیز کا استعمال بھی انہی رونما ہوتی تبدیلیوں میں سے ایک ہے ۔

اس شعبے کی ترقی کے لئے دنیا بھر کی تعمیراتی صنعت سے وابستہ کمپنیاں آئے روز مصنوعات اورنئی ٹیکنالوجیز متعارف کروارہی ہیں۔یہ اہم نہیں کہ اس صنعت کی پیداوار میں کتنا اضافہ دیکھنےمیں آیا، آج زیادہ اہم یہ ہے کہ وہ کون سی ٹیکنالوجیز ہیں جن کے متعارف کئے جانے کی بدولت تعمیراتی صنعتی پیداوار میں اضافہ دیکھنے میں آیا، آئیے ذکر کرتے ہیں آج ان ٹیکنالوجیز کا جو اس برس کنسٹرکشن ٹرینڈ میں خاصی مقبول ہیں۔

پراجیکٹ مینجمنٹ سوفٹ ویئر
دیر سے ہی سہی، تعمیراتی صنعت میںپراجیکٹ مینجمنٹ سوفٹ ویئر کو بطور ٹیکنالوجی استعمال کرنے کا رجحان بڑھنے لگا ہے ۔اس سافٹ ویئر کا استعمال پروجیکٹ مینیجر منصوبے کے آغاز ، منصوبہ بندی حتیٰ کہ تمام تعمیراتی اعداد وشمارکو منظم کرنے کے لئے کرنے لگے ہیں ۔یہ سوفٹ ویئر پراجیکٹ مینیجر کے لئے تین اہم فوائد کے ساتھ(جن میں استعداد یا کارکردگی، شفافیت اور احتساب )پروجیکٹ منظم کرنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے
منصوبوں کی ترقی کا جائزہ لینے ،کنسٹرکشن پروگریس کاموازنہ کرنے کے ساتھ ساتھ مجموعی تعمیراتی منصوبوں کو بھی بہتر بنانے میں مددگار ثابت ہوسکتا ہے۔ اگرچہ یہ سوفٹ بی آئی ایم ٹیکنالوجی کی طرح اتنا مقبول نہیں لیکن اس کے باوجود اس کا استعمال تعمیراتی صنعت میں اس برس کیا جانے لگا ہے ۔

ورچوئل ریئلٹی
تعمیراتی صنعت کے لئے ورچوئل ریئلٹی ایک اہم ٹول کے طور پر استعمال کی جاتی ہے جس کا سب سے اہم فائدہ یہ ہے کہ یہ گاہکوں اور سرمایہ کاروں کو پراجیکٹ کی ورچوئل تصویر فراہم کرتا ہے تاکہ وہ پراجیکٹ سے قبل ہی اپنی سرمایہ کاری اور منصوبے کے آغازوتکمیل کا جائزہ لے لیں۔اس ٹیکنالوجی کو آرکٹیکچرل منصوبوں کی تکمیل کے ساتھ ساتھ خریدوفرخت کے منصوبے مکمل کرنے کے لئے جدید تعمیراتی صنعت کا ذریعہ بنایا جاسکتا ہے۔

بلڈنگ انفارمیشن ماڈلنگ(BIM)
بی آئی ایم (بلڈنگ انفارمیشن ماڈلنگ) ٹیکنالوجی تعمیراتی صنعت میں سب سے زیادہ ابھرتا اور مقبول ہوتا ٹرینڈہے ۔یہ تعمیراتی اخراجات ،وسائل کاانتظام ،افرادی قوت ،تعمیراتی منصوبوں کو فروغ دینے میں اہم کردار ادا کرتا ہے ۔ تعمیراتی ماہرین اور مینیجرز کی جانب سے بھی اس ٹیکنالوجی کا استعمال تعمیراتی انداز کو مزید بہتر بنانے کے لئے کیا جانے لگا ہے ۔

ڈرونز
تعمیراتی صنعت میں ڈرونز کا استعمال تعمیراتی منصوبوں کا ڈیٹا جمع کرنے ،تعمیراتی سائٹ کی نقشہ سازی کی ترتیب ،صارف کو منصوبہ کی تازہ ترین اپ ڈیٹ سے آگاہ کرنے کے لئے استعمال کیا جانے لگا ہے ۔
مثال کے طور پر اگر کسی پرانی عمارت کی بازیافت ہو یا کسی بڑی ہائی رائز عمارت میں شمسی پینل شامل کرنے کا منصوبہ، عمارت کو ناپنے کا جو کام ڈرون بآسانی کرسکتا ہے اتنا کوئی اور ٹیکنالوجی نہیں کر سکتی،اس کے ذریعے سائٹ سے نقشہ بنانے اور دو جہتی اور تین جہتی تصاویر با آسانی کھینچی جاسکتی ہیں۔ اگرچہ یہ ٹیکنالوجی خاصی مہنگی ہے تاہم اس کی خصوصیات کے پیش نظر اس ٹیکنالوجی کا استعمال خاصا بڑھ رہا ہے۔

تھری ڈی ٹیکنالوجی
تعمیراتی صنعت میں تھری ڈی ٹیکنالوجی کا استعمال بھی کیا جانے لگا ہے اور یہی وہ ٹیکنالوجی ہے جو آنے والے دنوں میں تعمیراتی صنعت کو اتنا تیز کردے گی فوٹو اسٹیٹ مشین کی طرح تھری ڈی پرنٹر چھپاک سے مکانات کی تعمیر میں اپنا حصہ ڈالے گا۔

روبوٹکس
تعمیراتی شعبے میںروبوٹکس ٹیکنالوجی کی آمد نے ایک انقلاب برپا کردیا ہے ۔جس کے باعث صنعتکارروبوٹ کو افرادی قوت کے طور پر استعمال کرنے کا سوچ رہے ہیں ۔اگرچہ روبوٹکس کا استعمال صنعتی شعبے میں ابھی ابتدائی مراحل میں ہے لیکن اس ٹیکنالوجی سے متعلق ماہرین پیش گوئی کررہے ہیں کہ ایک روبوٹ سو مزدوروں کے برابر اینٹوں کا بھاری بوجھ اٹھا کر تعمیراتی مقام میں اپنا مقام بنانے کے باعث جلد ہی مقبول ہوجائے گا ۔
تعمیراتی صنعت میں روبوٹ ٹیکنالوجی کااستعمال اس صنعت کو مزید فروغ دینے کا سبب بن سکے گا جس کے بعد کم سے کم افرادی قوت کی ضرورت محسوس ہوگی “SAM”نامی ایک ایساہی روبوٹ مزدورکنسٹرکشن روبوٹکس کی طرف سے ڈیزائن کیا گیا ہے جو ایک عام مزدور جتنا کام تو نہیں کرسکتا لیکن ان کے ساتھ مل کرپیداوارکو پانچ گنا تک بڑھا دیتا ہے۔

سوچیے گا ضرور۔۔۔
اور آگاہ ضرور کیجیئے گا کہ کیا رائے ہے آپ سب کی؟
پر جواب دینے سے پہلے ہم سب خود کو آئینہ میں ضرور دیکھنا ہو گا۔
حَسْبِيَ اللَّهُ لا إِلَـهَ إِلاَّ هُوَ عَلَيْهِ تَوَكَّلْتُ وَهُوَ رَبُّ الْعَرْشِ الْعَظِيمِ
اللہ سبحان وتعالی ہم سب کو مندرجہ بالا باتیں کھلے دل و دماغ کے ساتھ مثبت انداز میں سمجھنے، اس سے حاصل ہونے والے مثبت سبق پر صدق دل سے عمل کرنے کی اور ساتھ ہی ساتھ ہمیں ہماری تمام دینی، سماجی و اخلاقی ذمہ داریاں بطریق احسن پوری کرنے کی ھمت، طاقت و توفیق عطا فرما ئے۔ آمین!

(تحریر – محترمہ رابعہ شیخ)

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.