136

ماہ رمضان، خود تشخیصی و تبدیلی کا تیسرا دن۔۔۔

زندہ رہنے کے لیے کھانا کھائیں، نہ کہ کھانا کھانے کے لیے زندہ رہیں۔ اس بات کو یقینی بنائیں کہ ہم اپنے ایک افطار کو دو دن کے افطار کے برابر بنا کر کھانا نہ کھائیں۔ یہ امر ہمیں دوران نماز سست کر ہماری نماز کو کامل ہونے میں روکاٹ کا سبب بنتا ہے۔ اس بات کی شدت کا اندازہ و مشاہدہ مندرجہ ذیل حدیث مبارکہ میں کیا جا سکتا ہے۔
ابو قتادہ رضی تعالی عنہ سے روایت ہے کہ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا، لوگوں میں بدترین چور وہ ہے جو اپنی نماز چوری کرتا ہے۔
صحابہ نے پوچھا “اے اللہ کے نبی صلی اللہ علیہ وسلم ، وہ اپنی نماز میں کیسے چوری کرتا ہے؟
آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے جواب دیا، وہ نماز میں رکوع اور سجود کو صحیح طرح مکمل ادا نہیں کرتا۔
(ﻣﺴﻨﺪ ﺍﻣﺎﻡ ﺍﺣﻤﺪ ﺍﺑﻦ ﺣﻨﺒﻞ ﺭﺿﯽ ﺍﷲ ﺗﻌﺎﻟﯽٰ ﻋﻨﮧ، ﺟﻠﺪ ﺁﭨﮭﻮﯾﮟ ﺻﻔﺤﮧ 386 ﺣﺪﯾﺚ 22705 ﺩﺍﺭﺍﻟﻔﮑﺮ ﺑﯿﺮﻭﺕ)

سوچیئے گا ضرور۔۔۔
اور آگاہ ضرور کیجیئے گا کہ کیا رائے ہے آپ سب کی؟
پر جواب دینے سے پہلے ہم سب خود کو آئینہ میں ضرور دیکھنا ہو گا۔
حسبی اللہ لا الہ الا ھو علیہ توکلت وھو رب العرش العظیم (آیت 129، سورتہ توبہ – القرآن)
اللہ سبحان وتعالی ہم سب کو مندرجہ بالا باتیں کھلے دل و دماغ کے ساتھ مثبت انداز میں سمجھنے، اس سے حاصل ہونے والے مثبت سبق پر صدق دل سے عمل کرنے کی اور ساتھ ہی ساتھ ہمیں ہماری تمام دینی، سماجی و اخلاقی ذمہ داریاں بطریق احسن پوری کرنے کی ھمت، طاقت و توفیق عطا فرما ئے۔ آمین!

(تحریر – محترم محمد شیراز جاوید اعوان )

نوٹ: لکھ دو کا اپنے تمام لکھنے والوں کے خیالات سے متفق ہونا قطعی ضروری نہیں۔
اگر آپ بھی لکھ دو کے پلیٹ فارم پر لکھنا چاہتے ہیں تو اپنا پیغام بذریعہ تصویری، صوتی و بصری یا تحریری شکل میں بمعہ اپنی تصویر، مکمل نام، فون نمبر، لنکڈان، فیس بک اور ٹویٹر آئی ڈیز اور اپنے مختصر مگر جامع تعارف کے ساتھ admin@likhdoo.com پر ارسال کردیجیے۔

=====================================================================

Ramadan Reinspired: Day Three…

Eat to live, not live to eat. Make sure that we’re not eating food that equals two days of Iftar at once. This will surely make us lazy which results in the actions of the prayer not being perfected. The severity of this can be observed in the hadith below.
It is narrated by Abu Qatadah [RA] that the Prophet (SWS) said, “The worst kind of thief is one who steals from his prayer.” The companions said, “O Prophet of Allah how can someone steal from their prayers?” He (SWS) said, “He does not fulfill the Rukoo of the prayer nor its Sujood.”

!Do Think About it
?And Let us Know What’s Your Opinion/Reviews
But Before Answering, All of us have to Look Ourselves into The Mirror.
حسبی اللہ لا الہ الا ھو علیہ توکلت وھو رب العرش العظیم – القرآن سورتہ توبہ، آیت 129
Sufficient for me is Allah ; there is no deity except Him. On Him I have relied, and He is the Lord of the Great Throne. Al Quran – 9:129
O Allah! Give all of us the courage, strength and ability; that we get understand and act upon the Positive lesson in this message with positively open heart & mind. And sincerely follow all our religious, social and moral responsibilities as well. Aamen

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.